آیت اللہ سبحانی کی نگاہ میں

انقلاب امام زمانہ(ع) کے تین بنیادی شرائط، آیت اللہ سبحانی کی نگاہ میں

شیعوں کے مرجع تقلید نے اس یہ کریمہ «وَ لَقَدْ كَتَبْنَا فىِ الزَّبُورِ مِن بَعْدِ الذِّكْرِ أَنَّ الْأَرْضَ يَرِثُهَا عِبَادِىَ الصَّلِحُون‏» (انبیاء/105) ( بتحقیق ہم نے توریت کے بعد زبور میں لکھ دیا کہ زمین کے وارث میرے صالح بندے ہوں گے) کی طرف اشارہ کیا اور کہا: سنت الہی یہ ہے کہ اللہ کے صالح بندے دنیا کے وارث بنیں، قرآن کریم کی پیشن گوئیاں قطعی ہیں اور قرآن نے یہاں پر مستقبل کی خبر دی ہے۔

۲ خرداد ۱۳۹۵ ساعت ۱۶:۵۲ 453 بازدید
{$pos17}